Martial law

Documents

naveed-razzaq-butt
of 1
Description
ایک اور مارشل لاء
.

"لو فوجی باوا آ بیٹھا

اب پیٹ میں روٹی جائے گی!"

واں سڑک کنارے بیٹھی ہے

حالات کی ماری بے چاری

گھٹڑی میں اُس کی سرمایہ،

افلاس کی مہلک بیماری۔

جب گود میں بچہ روتا ہے

ماں کے دل کو کچھ ہوتا ہے

پیارا سا گیت سناتی ہے

بچے کو جھوٹ بتاتی ہے

اور اپنا دل بہلاتی ہے

"خاموش! ذرا بھی شور نہ کر!

اب وقت بدلنے والا ہے۔

اب دیکھ تیری خاطر قسمت

کیا خوب کھلونے لائے گی!

تیری ماں کے ننگے سر کے لئے

ململ کی چادر آئے گی!

لو فوجی باوا آ بیٹھا

اب پیٹ میں روٹی جائے گی!"

.
شاعر: نوید رزاق بٹ
کتاب: نادان لاہوری
Text
  • 1. ‫ایل اوشرل مشرشل لء‬ ‫یہل آشعارل ۲۱ل آکتوبرل ۹۹۹۱ل کیل رآتل کول لکھے ،لیہ سوچ کر کہ طاقت کے آ س کھیل میں غریب عوآم کو کیا ملنا ہے ؟‬‫”لو فوجی باوآ آآ بیٹھا‬ ‫آب پیٹ میں روٹی جائے گی"‬ ‫وآں سڑک کنارے بیٹھی ہے‬ ‫حالات کی ماری بے چاری‬ ‫گھٹڑی میں ُآ س کی سرمایہ‬ ‫آفلا س کی مہلک بیماری‬ ‫جب گود میں بچہ روتا ہے‬ ‫ماں کے دل کو کچھ ہوتا ہے‬ ‫پیارآ سا گیت سناتی ہے‬ ‫بچے کو جھوٹ بتاتی ہے‬ ‫آور آپنا دل بہلاتی ہے‬‫/‪http://naveedrazzaqbutt.wordpress.com‬‬‫"خاموش،‬ ‫ذرآ بھی شور نہ کر!‬ ‫آب وقت بدلنے وآلا ہے!‬ ‫آب دیکھ تری خاطر قسمت‬ ‫کیا خوب کھلونے لائے گی‬ ‫تیری ماں کے ننگے سر کے لیے‬ ‫ململ کی چادر آآئے گی‬ ‫لو فوجی باوآ آآ بیٹھا‬ ‫آب پیٹ میں روٹی جائے گی!”‬ ‫ز‬ ‫ش‬ ‫ٹ‬ ‫شااع : نی دید ززااق ب بٹ‬ ‫د زز‬ ‫ز ز‬ ‫م :ہع : یاادداان لوہزی‬ ‫ز‬
Comments
Top